Saturday, 2017-11-18, 7:29 PM
TEHREER
The Place of Entertainment and knowledge
Welcome Guest | RSS
Site menu
Categories
غزلیاتنظمیں
منتخب اشعارقطعات
Quotationsانتخاب
Entries archive
Recent Blogs-->
Recent Comments-->
thnx inam

hahahah

Thnx inam

hahah nice

thnx inam

Our poll
Rate my site
Total of answers: 22
Main » 2012 » May » 12 » Ja taras aa he gaya hashr main lachar mujay
7:48 PM
Ja taras aa he gaya hashr main lachar mujay
جا ترس آ ہی گیا حشر میں لاچار مجھے
تو بھی کیا یاد کرے گا بتِ عیار مجھے

دھوپ جب سر سے گذرتی ہے بیابانوں کی
یاد آتا ہے تیرا سایۂ دیوار مجھے

شکوہ جو غلط ہے تو چلو یوں ہی سہی
حشر کا دن ہے بڑھانی نہیں تکرار مجھے

دردِ دل رسمِ محبت ہے تجھے کیا معلوم
چارہ گر تو نے سمجھ رکھا ہے بیمار مجھے

ہچکی آ آ کے کسی وقت نکل جائے گا دم
آپ کیوں یاد کیا کرتے ہیں ہر بار مجھے

اے قمر رات کی رونق بھی گئی ساتھ ان کے
تارے ہونے لگے معلوم گِراں بار مجھے
Category: غزلیات | Views: 158 | Added by: Crescent | Rating: 0.0/0
Total comments: 0
Only registered users can add comments.
[ Registration | Login ]
Search
Login In
Recent Posts-->
Popular Threads-->
Recent Photos-->
Poetry blog
Copyright Tehreer © 2017