Tuesday, 2017-10-17, 11:38 AM
TEHREER
The Place of Entertainment and knowledge
Welcome Guest | RSS
Site menu
Categories
غزلیاتنظمیں
منتخب اشعارقطعات
Quotationsانتخاب
Entries archive
Recent Blogs-->
Recent Comments-->
thnx inam

hahahah

Thnx inam

hahah nice

thnx inam

Our poll
Rate my site
Total of answers: 22
Main » 2012 » May » 12 » Naam sunta hun tera jub bhari sansar ke beach
7:44 PM
Naam sunta hun tera jub bhari sansar ke beach
نام سنتا ہوں ترا جب بھرے سنسار کے بیچ
لفظ رُک جاتے ہیں آکر مری گفتار کے بیچ

دل کی باتوں میں نہ آ یار کہ اس بستی میں
روز دل والے چُنے جاتے ہیں دیوار کے بیچ

ایک ہی چہرہ کتابی نظر آتا ہے ہمیں
کبھی اشعار کے باہر کبھی اشعار کے بیچ

ایک دل ٹوٹا مگر کتنی نقابیں پلٹیں
جیت کے پہلو نکل آئے کئی، ہار کے بیچ

کوئی محفل ہو نظر اس کی ہمیں پر ٹھہری
کبھی اپنوں میں ستایا تو کبھی اغیار کے بیچ

ایسے زاہد کی قیادت میاں توبہ توبہ
کبھی ایمان کی باتیں، کبھی کفار کے بیچ

کبھی تہذیب و تمدّن کا یہ مرکز تھا میاں
تم کو بستی جو نظر آتی ہے آثار کے بیچ

جس طرح ٹاٹ کا پیوند ہو مخمل میں عدیل
مغربی چال چلن مشرقی اقدار کے بیچ
Category: غزلیات | Views: 145 | Added by: Crescent | Rating: 0.0/0
Total comments: 0
Only registered users can add comments.
[ Registration | Login ]
Search
Login In
Recent Posts-->
Popular Threads-->
Recent Photos-->
Poetry blog
Copyright Tehreer © 2017